+9999-9999999 example@gmail.com

Home

Device Identification, Registration and Blocking System’s (DIRBS) objective is to ensure a healthy growth of mobile device ecosystem in Pakistan. DIRBS will ensure use of legal devices on the mobile networks. The import, use, and growth of legal devices will enhance government revenues, improve the quality of mobile service to consumers, preserve network resources of the mobile operators, provide better security and ensure the protection of intellectual property rights. PTA will make sure that only type approved and legal devices are operational over mobile networks in the country.

To Check your mobile device Click here

To find mobile phone IMEI, dial *#06# on mobile dialer

SMS Based Verification

INSTRUCTIONS:
  • Go to messages
  • Create a new message
  • Type IMEI
  • Send to 8484

Download DIRBS DVS Android App

Scan QR Code

source: Pakistan Telecommunication Authority

صرف پی ٹی اے کی تصدیق شدہ موبائل ڈیوائسز خرییدیں / استعمال کریں 

پی ٹی اے نے صارفین کی سہولت کے لیے ڈیوائس آئی ڈینٹی فیکیشن رجسٹریشن اور بلاکنگ سسٹم تیار کیا ہے ۔ اس نطام سے صارفین موبائل ڈیوائسز کی آئی ای ایم آئی سے اس بات کی تصدیق کر سکتے ہیں کہ ڈیوائس اصلی ہے اس کی درآمد قانونی ہے اور اس پر اطلاق شدہ تمام ڈیوٹیز اور ٹیکسز ادا کیے جا چکے ہیں اور یہ ڈی آر بی ایس ریگولیشنز / قواعد کے مطابق ہے ۔

پاکستان میں موبائل نیٹ ورکس کے لیے موجودہ زیر استعمال موبائل ڈیوائسز اس نظام سے متاثر نہیں ہوں گے اور نہ ہی ان کی تصدیق کی ضرورت ہے ۔

موبائل ڈیوائسز جو جو استعمال میں نہیں / غیر فعال ہیں ان کو ۲۹ جوان ۲۰۱۸ تک ڈی آئی آر بی ایس کے ذریعے پی ٹی اے کے ریگولیشنز کے مطابق کروالیا جائے تاکہ آئی ایم ای آئی کی بلاکنگ سے بچا جاسکے ۔

Importan FAQs on PTA website.

Q. What is an IMEI?

A. IMEI stands for International Mobile Equipment Identity; a unique number per mobile device (phone, tablet, dongle, router, etc.) that uses a SIM card.

Q. How may I know the IMEI code?

A. IMEI can be found by various method.

  1. By dialing *#06# on your mobile dial pad.
  2. It is printed on box and device
  3. Go to settings > About phone > Status > IMEI Information.
  4. Remove back cover and battery of your mobile phone. You will find IMEI inside the Battery compartment (Only applicable for mobile devices with removable battery option).
  5. Go to Settings > General > About (Only applicable for IOS devices)

Q. What is a Compliant Device?

A. A compliant device means a device that fulfils the following requirements:

  • Devices with valid IMEIs assigned by Global System Mobile Association (GSMA).
  • Devices with unique IMEIs.
  • Devices not in the stolen/lost lists (reported locally to the Authority and globally to GSMA).
  • Devices type approved/having Certification of Compliance to Technical Standards for IMEI devices issued by the Authority.

Q. What is a DIRBS?

A. DIRBS (Device Identification Registration and Blocking System) is a system to cater counterfeit and illegal devices.

Q. What is a Device Verification System?

A. It is a module of DIRBS used to check/verify device compliance status. It has three modes:

  • Web
  • Android APP
  • SMS (Write 15 digit IMEI in message and send to 8484)

Q. How may I know that a mobile phone is compliant before buying it?

A. Through Device Verification System. If IMEI status is compliant, it means that the device has a valid IMEI.

Q. How may I know that a tablet using a SIM Card has compliant IMEI before buying it?

A: The same procedure applies for all the SIM based devices including tablets.

Q. What happens to an existing phone that I am using today? Do I need to do anything to pair/register it?

A: If you haven’t received any SMS from your relevant operator, it means that your device is compliant and you don’t need to do anything.

  • If you do receive notification from your operator regarding you device, then follow the instructions mentioned in that SMS.

Q. I have a mobile device which I have not used in a long time. Would it still be operational on the network?

A: You need to check its status through Device Verification System. If your device has a compliant IMEI, you do not need to do anything otherwise insert a SIM in your device and do some chargeable activity for example sent an SMS or make a phone call. This activity will help us auto-pair your device with your phone number.

  • If you receive a notification message from you operator, then follow the instructions received in that SMS or contact your operator for further assistance.

Q. What if I buy a new device in Pakistan and it is not functioning on the network, what can I do to solve the problem?

A. You need to contact the seller to resolve this issue. It is recommended to buy only PTA approved device and verify you device IMEI status through DVS.

Q. What if I have an original device and I still receive notification message from my operator?

A: This could mean either of the following:

  • Your device is being illegally imported.
  • Your device’s IMEI has been detected as duplicate

Q. Can a phone have more than one IMEI number?

A: Yes, it can have more than one IMEI. It is recommended to verify all IMEIs of your device.

Q. Why is an IMEI blocked?

A. Because IMEI has been reported as stolen/lost and all such IMEIs are blocked as per PTA policy. IMEI (non-compliant) can also be blocked if the subscribers/users fail to pair their device’s IMEI before 29th June 2018.

IMEI can be blocked due to different reasons including but not limited to:

  1. If an IMEI is reported stolen locally or globally
  2. If an IMEI is found non-compliant and not paired before 29th June 2018.
  3. After 30th June 2018, if an IMEI is found non-compliant, it will be blocked within 15 days from the day it was first seen on network

Q. May I change my IMEI number?

A: Changing or modifying the IMEI is considered a fraudulent act with legal consequences. All such IMEIs will be blocked.

Q. Can an original phone have no IMEI?

A: No. All original/authentic devices have GSMA approved IMEIs.

Q. I am roaming in Pakistan; will I be able to use my mobile in Pakistan?

A: Yes. Roamers will be able to use their devices as per DIRBS SOP.

Q. I lost my phone (or it was stolen); may I call someone to request the IMEI block?

A: This remains a security issue that must follow the existing security procedures.

  1. Contact CPLC 24/7 Call Centre helplines 1102 021-35662222 & 021-35682222 for lodging complaint of snatched / stolen / Lost Mobile Phone.
  2. Provide IMEI No of snatched / stolen / Lost Mobile Phone along with other relevant information.
  3. Information of snatched / stolen / Lost Mobile Phone is sent to PTA for issuing blocking instructions to all mobile network operators.
  4. Mobile network operators block snatched / stolen / Lost Mobile Phone within 24 hours

 

نظر نیچی رہے، اور لہجہ شرمندہ۔

لوگ اکثر پریشان ہوتے ہیں کہ خیرات کسی مستحق کو دینا چاہیے مگر لے دے کے رمضان کی آمد کے ساتھ ہی سڑکوں، مسجدوں کے باہر، اور گلیوں میں امڈ آنے والے بھکاریوں کے کوئی اور مستحق ملتا ہی نہیں۔ یعنی انکو ڈھونڈنا مشکل ہے۔
حقیقت یہ ہے کہ ہم صدقہ و خیرات کو سر سے بوجھ کی طرح اتار پھینکنا چاہتے ہیں۔ تو کم سے کم فاصلے پر کم سے کم وقت میں یہ فرض ادا ہوجائے، یہی کافی ہے۔

اگر واقعی آپ چاہتے ہیں کہ آپ کی خیرات کسی مستحق کے کام آئے تو کچھ ہمت کیجیے۔ انکو ڈھونڈیے۔ ان تک خود جائیے اور زرا شرمندگی سے نظر جھکا کر امدار کا تھیلا پکڑا کر الٹے قدموں لوٹ آئیے۔

مستحق کون ہیں؟ جو نہیں مانگتے مگر پیٹ کاٹتے ہیں۔ جن کے بچے حسرت سے پکوڑوں سموسوں کو دیکھتے ہیں۔ جو گھر میں ہمسائیوں سے آنے والی خوشبو سے بے چین ہوجاتے ہیں، مگر تھوک نگل کر رات والا سالن کھالیتے ہیں۔ جن سے مسجد میں پوچھیں کہ کیا حال ہے تو وہ مصنوعی ڈکار مار کر کہتے ہیں، اللہ کا شکر، اتنا کھایا، بدہضمی ہونے والی ہے۔

پہلے حق تو جاننے والوں میں مستحقین کا ہے، یقین کریں وہ رشتہ دار جو غریب ہیں مگر آپ سے انکی بنتی نہیں، ان کی مدد کرنا دہرے ثواب کا باعث ہوگا۔ پہلا حق رشتے داروں کا ہے۔

کریم یا اوبر کی بائیک کال کریں۔ جب بندہ آ جائے تو رائیڈ کینسل کردیں، اور اسکو راشن کا تھیلا، یا نقد خیرات دے دیں۔ جو بندہ پہلی نوکری کے بعد گھر جانے کی بجائے سو سو روپے کے لیے بائیک پر سواریاں ڈھوتا ہے، اس کے بچوں کو آپکی خیرات کی ضرور لگے گی۔

اپنے علاقے کے پرائیویٹ اسکولوں سے رابطہ کیجیے۔ یہاں جو بچیاں پڑھاتی ہیں، ان میں دس میں سے نو کے گھر میں برے حالات ہیں۔ وہ مجبوری میں چار پانچ ہزار کی جاب کے لیے سارا دن کام کرتی ہیں۔ ان سفید پوش گھرانوں میں راشن یا نقدی بھیجیے۔

چھوٹی گلیوں میں دکاندار کے پاس جائیے، عصر کے بعد۔ آپ کو ضرور کچھ لوگ ملیں گے جو ادھار لیتے ہونگے۔ انکا ادھار چکا دیجیے۔ ہوسکے تو دکاندار سے پوچھ کر کسی لمبے ادھار والے مستحق کو بلا کر اسکا ادھار چکا دیجیے۔

چھوٹے تندوروں پر روٹی لگانے والے، ویٹر اور صفائی والے سب اتنا ہی کماتے ہیں کہ انکے گھر فاقوں سے بچ سکیں، انکو بھی آپ کی خیرات کی ضرورت ہے۔ ان میں سے اکثر خیرات لینے سے انکار کر دیں گے۔ انکی ٹھوڑی پکڑ لیجیے، منت کر کے “تحفے کے طور” پر دے دیجیے۔

مسجدوں میں بوڑھوں کے لباس سے اندازہ ہوجائیگا۔ نہیں تو جوتے سے۔ واپس جاتے ہوئے سلام کرکے ہزار پانسو کی خیرات تحفتاً ان کو تھما دیجیے۔ وہ بچوں کے لیے ضرور کچھ ایسا لے جائینگے، جن کی انکو ضرورت ہے۔

بازاروں میں ریڑھیوں یا ہاتھوں پر سودا بیچتے ہوئے معمر لوگوں کو دیجیے۔ مگر ایسے لوگوں کو نہیں جو پنسلیں ہاتھ میں لیے اصل میں بھیک ہی مانگتے ہیں۔ انکو بس پانچ دس دیجیے کہ دینے کا بھرم رہے۔ مگر جو نہیں مانگ پاتے، انکو دینا بہتر ہے۔

یہ چند باتیں ذہن میں آئی ہیں، باقی آپ خود بھی ایسے ہی مزید طریقوں سے لوگوں کو پہچان سکتے ہیں کہ جن کو مدد کی ضرورت ہے مگر وہ اپنی غیرت کے ہاتھوں محنت کے علاوہ کوئی مدد قبول نہیں کرتے۔ انکو اصرار کر کے دیجیے۔
بس نظر نیچی رہے، اور لہجہ شرمندہ

Birds need more water in summer

Some Easy Ways to Charity

اپنے کمرے کی کھڑکی میں یا چھت پر پرندوں کے لیے پانی یا دانہ رکھیے۔

Put water or granularity in the window of the living room or on the roof for birds.

 اپنی مسجد میں کچھ کرسیاں رکھ دیجیے جس پر لوگ بیٹھ کر نماز پڑھیں۔

Put some chairs in your mosque where people sit and read the prayer

 سردیوں میں جرابیں/مفلر/ٹوپی گلی کے جمعدار یا ملازم کو تحفہ کر دیجیے۔

Gifts the stockings / muffler / cap street sweepers or employee in the winter.

گرمی میں سڑک پر کام کرنے والوں کو پانی لے کر دیجیے۔

Take water to the workers working in the heat.

 اپنی مسجد یا کسی اجتماع میں پانی پلانے کا انتظام کیجیے۔

Manage water in your mosque or a gathering.

 ایک قرآن مجید لے کر کسی کو دیجیے یا مسجد میں رکھیے۔

Take a Quran and give it to someone or put it in the mosque.

 کسی معذور کو پہیوں والی کرسی لے دیجیے۔

Take a wheelchair to a special person.

 باقی کی ریزگاری ملازم کو واپس کر دیجیے۔

Return the remaining coins to the employee.

 اپنی پانی کی بوتل کا بچا پانی کسی پودے کو لگایے۔

Water any plant bottle of your remaining water in your bottle.

 کسی غم زدہ کیلئے مسرت کا سبب بنیے۔

Cause happyness for any sorrow.

 لوگوں سے مسکرا کر پیش آئیے اور اچھی بات کیجیے۔

Let’s smile and talk to people.

 کھانے پارسل کراتے ہوئے ایک زیادہ لے لیجیے کسی کو صدقہ کرنے کے لیے۔

Take one more while eating food parcel to make someone charity.

 ہوٹل میں بچا کھانا پیک کرا کر باہر بیٹھے کسی مسکین کو دیجیے۔

Pack the remaining food in the hotel and give it to some poor person sitting outside.

 گلی محلے کے مریض کی عیادت کو جانا اپنے آپ پر لازم کر لیجیے۔

Make sure you go to the nearest patient.

 ہسپتال جائیں تو ساتھ والے مریض کے لیے بھی کچھ لیکر جائیں۔

If you go to the hospital then go for a patient along with something.

 حیثیت ہے تو مناسب جگہ پر پانی کا کولر لگوائیں۔

If there is a situation, apply the water cooler in the appropriate place.

 حیثیت ہے تو سایہ دار جگہ یا درخت کا انتظام کرا دیجیے۔

If there is a situation, arrange a shaded place or tree.

 زندوں پر خرچ کیجیے مردوں کے ایصال ثواب کے لیے۔

Spend on living for men’s reward.

 اپنے محلے کی مسجد کے کولر کا فلٹر تبدیل کرا دیجیے۔

Change the filter of the cooler of your local mosque.

 گلی اندھیری ہے تو ایک بلب روشن رکھ چھوڑیے۔

If the street is dark, leave a bulb bright.

 مسجد کی ٹوپیاں گھرلا کر دھو کر واپس رکھ آئیے۔

Wash the masque caps and keep it back.

 مسجدوں کے گندے حمام سو دو سو دیکر کسی سے دھلوا دیجیے۔

Spent some money to wash of bathroom of any mosque.

 گھریلو ملازمین سے شفقت کیجیے، ان کے تن اور سر ڈھانپ دیجیے۔

Be humble for your employees, Cover their head and body.

 

صدقہ احادیث کی روشنی میں

[1. برائی سے روکنا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[2. نیکی کا حکم دینا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[3. لا الہ الا الله کہنا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[4. سبحان الله کہنا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[5. الحمدلله کہنا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[6. الله اکبر کہنا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[7. استغفرالله کہنا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[8. راستے سے پتھر,کانٹا اور ہڈی ہٹانا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1007

[9. اپنے ڈول سے کسی بھائی کو پانی دینا صدقہ ہے۔ [ترمذی: 1956

[10. بھٹکے ہوئے شخص کو راستہ بتانا صدقہ ہے۔ [ترمذی: 1956

[11. اندھے کو راستہ بتانا صدقہ ہے۔ [ابن حبان: 3368

[12. بہرے سے تیز آواز میں بات کرنا صدقہ ہے۔ [ابن حبان: 3368

[13. گونگے کو اس طرح بتانا کہ وہ سمجھ سکے صدقہ ہے۔ [ابن حبان: 3377

[14. کمزور آدمی کی مدد کرنا صدقہ ہے۔ [ابن حبان: 3377

[15. مدد کے لئے پکارنے والے کی دوڑ کر مدد کرنا صدقہ ہے۔ [ابن حبان: 3377

[16. ثواب کی نیت سے اپنے گھر والوں پر خرچ کرنا صدقہ ہے۔ [بخاری: 55

[17. ثواب کی نیت سے اپنے گھر والوں پر خرچ کرنا صدقہ ہے۔ [بخاری: 55

[18. دو لوگوں کے بیچ انصاف کرنا صدقہ ہے۔ [بخاری: 2518

[19. کسی آدمی کو سواری پر بیٹھانا یا اس کا سامان اٹھا کر سواری پر رکھوانا صدقہ ہے ۔ [بخاری: 2518

[20. دوسرے کو نقصان پہونچانے سے بچانا صدقہ ہے۔ [بخاری: 2518

[21. نماز کے لئے چل کر جانے والا ہر قدم صدقہ ہے۔ [بخاری: 2518

[22. راستے سے تکلیف دہ چیز ہٹانا صدقہ ہے۔ [بخاری: 2518

[23. خود کھانا صدقہ ہے۔ [نسائی – کبری: 9185

[24. اپنے بیٹے کو کھلانا صدقہ ہے۔ [نسائی – کبری: 9185

[25. اپنی بیوی کو کھلانا صدقہ ہے۔ [نسائی – کبری: 9185

[26. اپنے خادم کو کھلانا صدقہ ہے۔ [نسائی – کبری: 9185

[27. کسی مصیبت زدہ حاجت مند کی مدد کرنا صدقہ ہے۔ [نسائی: 253

[28. اپنے بھائی سے مسکرا کر ملنا صدقہ ہے۔ [ترمذی: 1963

[29. پانی کا ایک گھونٹ پلانا صدقہ ہے۔ [ابو یعلی: 2434

[30. اپنے بھائی کی مدد کرنا صدقہ ہے۔ [ابو یعلی: 2434

[31. ملنے والے کو سلام کرنا صدقہ ہے۔ [ابو داﺅد: 5243

[32. آپس میں صلح کروانا صدقہ ہے۔ [بخاری – تاریخ: 259/3

[33. تمہارے درخت یا فصل سے جو کچھ کھائے وہ تمہارے لئے صدقہ ہے۔ [مسلم: 1553

[34. بھوکے کو کھانا کھلانا صدقہ ہے۔ [بیہقی – شعب: 3367

[35. پانی پلانا صدقہ ہے۔ [بیہقی – شعب: 3368

[36. دو مرتبہ قرض دینا ایک مرتبہ صدقہ دینے کے برابر ہے۔ [ابن ماجہ: 3430

[37. کسی آدمی کو اپنی سواری پر بٹھا لینا صدقہ ہے۔ [مسلم: 1009

[38. گمراہی کی سر زمین پر کسی کو ہدایت دینا صدقہ ہے۔ [ترمذی: 1963

[39. ضرورت مند کے کام آنا صدقہ ہے۔ [ابن حبان: 3368

[40. علم سیکھ کر مسلمان بھائی کو سکھانا صدقہ ہے۔ [ابن ماجہ: 243

اس پیغام کو لوگوں تک پہنچا کر صدقہ جاریہ کا حصہ بن جائیں…

Karachi is the City of Light.

Paksitan`s big city Hyderabad is called City of Bangles.

Bangles are sign of matrimony. Various colors and designed bangles are manufacturing in Hyderabad Pakistan. A huge number of citizens are linked to this business.

Colorful Bangles in Sets called :Tora”

 

Multi Shades Bangles Sets
Packing Process of Bangles
Market Tower Hyderabad

 


Scroll to Top